نیم کے فوائد

نیم کی ست تیار کی جارھے ھے نیم کا درختوں میں سے ھے جن کو خدا تعالی نے بیش بہا فوائد سے مالا مال کیا ھوا ھے گو اس کا نام نیم (آدھا) ھے مگر فوائد کے لحاظ سے آدھا نہیں بلکہ کامل ھے یوں کہہ علم طب میں آدھا حصہ نیم نے لے رکھا ھے اور باقی ادویات کا آدھا حصہ ھے مظفرگڑھ اور اس کے گردنواح میں نیم کے درخت کافی تعداد میں ملتے ھیں نیم کا درخت ذائقہ میں کڑوا ھے اور نتائج اور تجربات میں بہت میٹھا ثابت ھوا یہ بکائن کی قسم کا گھنا اور سایہ دار درخت ھے اس کی اونچائی بیس گز تک تقریبا موٹائی تین سے چار انچ تک ھوتی ھے پہلے درجہ میں گرم خشک ھےنیم مزے کے لحاظ سے جتنا کڑوا ھے فائدہ کے لحاظ سے اتنا میٹھا ھےاس کے تمام اجزا پھول پھل چھال پتے سب بطور دوا استعمال ھوتے ہیں نیم کے پتے بہت مصفی خون ھوتے ہیں خارش پھوڑے پھنسیاں حتی کے کوڑھ کے لیے بھی بہت مفید ھے میں اپنی دواسازی اور میڈسن کی تیاری میں نیم کے اجزا کا بہت کثرت سے استعمال کرتا ھوں بواسیر خونی کے لیے اکسیر حب بواسیر نیم کے اجزا شامل کرکے تیار کرتا ھوں جس نسخہ گروپ مطب کامل میں موجود ملے گا اس دوا سے تیس سالہ پرانی بواسیر بھی ایک ماہ مسے جھڑ کر بواسیر نیست نابود ھوجاتی ھے اس کی تصدیق مطب کامل اور دوسرے گروپوں کے ممبران بھی کرے گے اس وقت نیم کے برگ کی ست تیار کررھا تھا سوچا گروپ میں بھی پوسٹ کردو تاکہ دوسرے بھائیوں کا بھی فائدہ ھوجاے آپ اپنی قابلیت کے مطابق نیم کی ست تیار کرکے بہت فائدے لے سکتے ہیں کحچھ دن پہلے میرے پاس ایک مریض آیا جس کے جسم پر تقریبا پھوڑے پیپ نما زخم تھے میں ایک اور دوا کے ساتھ ست نیم بھی مریض کو دی اور صبح نہار منہ چنے برابر مقدار مکھن میں رکھ کر کھانے کا کہا سات دن بعد جب مریض میرے پاس آیا تو ستر فیصد پھوڑے ختم ھوچکے تھے

اس موضوع کو جواب دیں

یہ سائٹ انفرادی کمپیوٹر، پرسنل سروس سیٹنگ، تجزیاتی و شماریاتی مقاصد، مواد اور اشتہارات کی کسٹمائزیشن میں فرق تلاش کرنے کے لئے کوکیز اور دوسری ٹریکنگ ٹیکنالوجیز کو استعمال کرتی ہے نجی معلومات کی حفاظتی اور کوکیز پالیسی